نہ تھا کچھ تو خدا تھا کچھ نہ ہوتا تو خدا ہوتا

مرزا غالب

نہ تھا کچھ تو خدا تھا کچھ نہ ہوتا تو خدا ہوتا

مرزا غالب

MORE BY مرزا غالب

    نہ تھا کچھ تو خدا تھا کچھ نہ ہوتا تو خدا ہوتا

    ڈبویا مجھ کو ہونے نے نہ ہوتا میں تو کیا ہوتا

    ہوا جب غم سے یوں بے حس تو غم کیا سر کے کٹنے کا

    نہ ہوتا گر جدا تن سے تو زانو پر دھرا ہوتا

    ہوئی مدت کہ غالبؔ مر گیا پر یاد آتا ہے

    وہ ہر اک بات پر کہنا کہ یوں ہوتا تو کیا ہوتا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    جگجیت سنگھ

    جگجیت سنگھ

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نہ تھا کچھ تو خدا تھا کچھ نہ ہوتا تو خدا ہوتا نعمان شوق

    مآخذ:

    • Book : Deewan-e-Ghalib Jadeed (Al-Maroof Ba Nuskha-e-Hameedia) (Pg. 194)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY