Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

کہا میں نے مری آنکھوں میں پانی ہے

افتخار راغب

کہا میں نے مری آنکھوں میں پانی ہے

افتخار راغب

MORE BYافتخار راغب

    کہا میں نے مری آنکھوں میں پانی ہے

    جواب آیا محبت کی نشانی ہے

    کہا میں نے لگی دل کی بجھانی ہے

    جواب آیا یہ جذبہ جاودانی ہے

    کہا میں نے کھلیں گے کب وفا کے پھول

    جواب آیا ابھی موسم خزانی ہے

    کہا میں نے محبت محور ہستی

    جواب آیا بلائے ناگہانی ہے

    کہا میں نے کہ ہر لمحہ سسکتا ہوں

    جواب آیا کہ الفت تو نبھانی ہے

    کہا میں نے ستم اتنا نہیں اچھا

    جواب آیا محبت آزمانی ہے

    کہا میں نے متاع زیست یعنی تو

    جواب آیا یہاں ہر چیز فانی ہے

    کہا میں نے کہ دیکھ ان سرخ آنکھوں میں

    جواب آیا محبت آسمانی ہے

    کہا میں نے کہ کیوں اتنے گریزاں ہو

    جواب آیا تمہاری مہربانی ہے

    کہا میں نے مری غزلوں کی جاں ہو تم

    جواب آیا تمہاری خوش گمانی ہے

    کہا میں نے خموشی مار ڈالے گی

    جواب ان کا مکمل بے زبانی ہے

    کہا میں نے سناؤ حال دل راغبؔ

    جواب آیا بہت لمبی کہانی ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے