منہ تکا ہی کرے ہے جس تس کا

میر تقی میر

منہ تکا ہی کرے ہے جس تس کا

میر تقی میر

MORE BYمیر تقی میر

    منہ تکا ہی کرے ہے جس تس کا

    حیرتی ہے یہ آئینہ کس کا

    شام سے کچھ بجھا سا رہتا ہوں

    دل ہوا ہے چراغ مفلس کا

    تھے برے مغبچوں کے تیور لیک

    شیخ مے خانے سے بھلا کھسکا

    داغ آنکھوں سے کھل رہے ہیں سب

    ہاتھ دستہ ہوا ہے نرگس کا

    بحر کم ظرف ہے بسان حباب

    کاسہ لیس اب ہوا ہے تو جس کا

    فیض اے ابر چشم تر سے اٹھا

    آج دامن وسیع ہے اس کا

    تاب کس کو جو حال میرؔ سنے

    حال ہی اور کچھ ہے مجلس کا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    مہدی حسن

    مہدی حسن

    RECITATIONS

    احمد محفوظ

    احمد محفوظ

    احمد محفوظ

    منہ تکا ہی کرے ہے جس تس کا احمد محفوظ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY