Editor Choiceمنتخب Popular Choiceمقبول
غزلصنف
0 ا ,گگن میں جب اپنا ستارہ نہ دیکھا0
0 اس طرح مل کہ ملاقات ادھوری نہ رہے0
0 اس وقت اپنے تیور پورے شباب پر ہیں0
0 آنکھوں سے جب یہ خواب سنہرے اتر گئے0
0 آنکھوں میں جو ہماری یہ جالوں کے داغ ہیں0
0 بڑھ رہی ہے دل کی دھڑکن آندھیوں دھیرے چلو0
0 پیاسے ہونٹوں سے جب کوئی جھیل نہ بولی بابو جی0
0 تمہارے جسم جب جب دھوپ میں کالے پڑے ہوں گے0
0 جب میرے گھر کے پاس کہیں بھی نگر نہ تھا0
0 خود کو نظر کے سامنے لا کر غزل کہو0
0 دل پہ مشکل ہے بہت دل کی کہانی لکھنا0
0 دل میں جو زخم ہے ان کو بھی ٹٹولے کوئی0
0 دو چار بار ہم جو کبھی ہنس ہنسا لئے0
0 سانچے میں ہم نے اور کے ڈھلنے نہیں دیا0
0 سانسوں کی ٹوٹی سرگم میں اک میٹھا سور یاد رہا0
0 عمر بھر کچھ اس طرح ہم جاگتے سوتے رہے0
0 کرو ہم کو نہ شرمندہ بڑھو آگے کہیں بابا0
0 کوئی نہیں ہے دیکھنے والا تو کیا ہوا0
0 ہم سے مت پوچھو کہ اک وہ چیز کیا دونوں میں ہے0
0 وہ مری راتیں مری آنکھوں میں آ کر لے گئی0
seek-warrow-w
  • 1
arrow-eseek-e1 - 20 of 20 items