aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

بے زبان

مختصر اعظمی

بے زبان

مختصر اعظمی

MORE BYمختصر اعظمی

    ہم ایک پاؤں پہ ہیں زیر سائبان کھڑے

    ہمارے گھر میں بھی رہتے ہیں مہمان کھڑے

    کرو نہ ہند میں بات اتحاد ملت کی

    کہ اس سے ہوتے ہیں امریکیوں کے کان کھڑے

    ملا ہے سب کو الیکشن میں حکم سرکاری

    وہاں پہ شیخ نہ بیٹھیں جہاں ہیں خان کھڑے

    میں پیٹا جاتا ہوں جب دشمنوں کے ہاتھوں سے

    تماشہ دیکھتے ہیں میرے مہربان کھڑے

    کریں گے وعدہ زباں کا جب آئے گا نمبر

    اسی طرح رہیں لائن میں بے زبان کھڑے

    موضوعات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے