aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

ہمارے بھی ہیں مہرباں

شوکت جمال

ہمارے بھی ہیں مہرباں

شوکت جمال

MORE BYشوکت جمال

    ان کو ہم اپنا دوست لکھیں آشنا لکھیں

    ہمدم لکھیں رفیق لکھیں ہم نوا لکھیں

    شعر و ادب سے ان کو تعلق ہے کس قدر

    طاقت کہاں قلم میں کہ یہ ماجرا لکھیں

    لکھنے میں کچھ نہ کچھ ہیں وہ مصروف رات دن

    کاغذ قلم دوات میں ان کو فنا لکھیں

    نقد و نظر میں ہے وہ مہارت کے ہم انہیں

    اقلیم نظم و نثر کا فرماں روا لکھیں

    یکتا ہو اپنے فن میں لکھاڑی ہوا کرے

    دل کو نہیں لگا تو اسے سر پھرا لکھیں

    تحت الثریٰ سے عرش بریں ایک آن میں

    پہنچے وہ خوش نصیب جسے مرحبا لکھیں

    اتنا ہی ہم لکھیں کہ سمجھ پائیں وہ اسے

    ان کی پہنچ سے ہم نہ کبھی ماورا لکھیں

    ساقی کا اور شراب کا ہو ذکر بار بار

    زاہد کو بھول کر نہ کبھی پارسا لکھیں

    محبوب کے بیاں میں ہو لازم مبالغہ

    چہرے کو پھول زلف کو ہم اژدہا لکھیں

    ممکن نہیں غضب سے بچیں ہم جناب کے

    بالشتیوں کو بھی نہ اگر سرو سا لکھیں

    لازم ہے ہم پہ ہم جو لکھیں بحر میں رہے

    ہم وزن و ہم ردیف لکھیں قافیہ لکھیں

    لکھنے میں احتیاط سے ہم کام لیں مگر

    جو ان کے جی میں آئے اسے برملا لکھیں

    لکھے مقدمہ تو مصنف بہ قلم خود

    لیکن ہے یہ اٹل کہ وہی فیصلہ لکھیں

    دو جلدیں اس لئے انہیں بھیجیں کتاب کی

    بے لاگ اپنی رائے لکھیں تبصرہ لکھیں

    بولے وہ دیکھ کر مرا مجموعۂ کلام

    پہلے پہ کیا لکھوں چلیں اب دوسرا لکھیں

    موضوعات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے