جوتا

MORE BYسعادت حسن منٹو

    کہانی کی کہانی

    کہانی ایک ایسے ہجوم کی ہے جو سر گنگا رام کے بت پر حملہ آور ہو جاتا ہے۔ اسی ہجوم میں ایک شخص جوتوں کی مالا بناکر بت کو پہنانا چاہتا ہے، لیکن اس سے پہلے ہی وہ پولس کی گولی سے زخمی ہو جاتا ہے۔ بعد میں اسے سر گنگا رام اسپتال میں علاج کے لیے بھیج دیا جاتا ہے۔

    ہجوم نے رخ بدلا اور سرگنگارام کے بت پر

    پل پڑا۔ لاٹھیاں برسائی گئیں، اینٹیں اور پتھر پھینکے

    گئے۔ ایک نے منہ پر تارکول مل دیا۔ دوسرے نے

    بہت سے پرانے جوتے جمع کیے اور ان کا ہار بنا کر

    بت کے گلے میں ڈالنے کے لیے آگے بڑھا۔ مگر

    پولیس آگئی اور گولیاں چلنا شروع ہوئیں۔

    جوتوں کا ہار پہنانے والا زخمی ہوگیا۔ چنانچہ مرہم

    پٹی کے لیے اسے سرگنگا رام ہسپتال بھیج دیا گیا۔

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے