آپ میں کیونکر رہے کوئی یہ ساماں دیکھ کر

یگانہ چنگیزی

آپ میں کیونکر رہے کوئی یہ ساماں دیکھ کر

یگانہ چنگیزی

MORE BYیگانہ چنگیزی

    آپ میں کیونکر رہے کوئی یہ ساماں دیکھ کر

    شمع عصمت کو بھری محفل میں عریاں دیکھ کر

    دل کو بہلاتے ہو کیا کیا آرزوئے خام سے

    امر نا ممکن میں گویا رنگ امکاں دیکھ کر

    کیا عجب ہے بھول جائیں اہل دل اپنا بھی درد

    حسن مستانہ کو آخر میں پشیماں دیکھ کر

    ڈھونڈتے پھرتے ہو اب ٹوٹے ہوئے دل میں پناہ

    درد سے خالی دل گبر و مسلماں دیکھ کر

    دل جلا کر وادئ غربت کو روشن کر چلے

    خوب سوجھی جلوۂ شام غریباں دیکھ کر

    امتیاز صورت و معنی سے بیگانہ ہوا

    آئنے کو آئنہ حیراں کو حیراں دیکھ کر

    پیرہن میں کیا سما سکتا حباب جاں بلب

    ہستئ موہوم کا خواب پریشاں دیکھ کر

    صبر کرنا سخت مشکل ہے تڑپنا سہل ہے

    اپنے بس کا کام کر لیتا ہوں آساں دیکھ کر

    اور کیا ہوتی یگانہؔ درد عصیاں کی دوا

    کیا غزل یاد آئی واللہ فرد عصیاں دیکھ کر

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے