دو چار گام راہ کو ہموار دیکھنا

ندا فاضلی

دو چار گام راہ کو ہموار دیکھنا

ندا فاضلی

MORE BY ندا فاضلی

    دو چار گام راہ کو ہموار دیکھنا

    پھر ہر قدم پہ اک نئی دیوار دیکھنا

    آنکھوں کی روشنی سے ہے ہر سنگ آئینہ

    ہر آئنہ میں خود کو گنہ گار دیکھنا

    ہر آدمی میں ہوتے ہیں دس بیس آدمی

    جس کو بھی دیکھنا ہو کئی بار دیکھنا

    میداں کی ہار جیت تو قسمت کی بات ہے

    ٹوٹی ہے کس کے ہاتھ میں تلوار دیکھنا

    دریا کے اس کنارے ستارے بھی پھول بھی

    دریا چڑھا ہوا ہو تو اس پار دیکھنا

    اچھی نہیں ہے شہر کے رستوں سے دوستی

    آنگن میں پھیل جائے نہ بازار دیکھنا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    چندن داس

    چندن داس

    مآخذ:

    • Book : ida Fazli Ki Chuninda Ghazlen (Pg. 96)
    • Author : T.N.Raz
    • مطبع : Unistar Book Pvt. Ltd ( 2014)
    • اشاعت :  2014

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY