گو رات مری صبح کی محرم تو نہیں ہے

مجروح سلطانپوری

گو رات مری صبح کی محرم تو نہیں ہے

مجروح سلطانپوری

MORE BYمجروح سلطانپوری

    گو رات مری صبح کی محرم تو نہیں ہے

    سورج سے ترا رنگ حنا کم تو نہیں ہے

    کچھ زخم ہی کھائیں چلو کچھ گل ہی کھلائیں

    ہرچند بہاراں کا یہ موسم تو نہیں ہے

    چاہے وہ کسی کا ہو لہو دامن گل پر

    صیاد یہ کل رات کی شبنم تو نہیں ہے

    اتنی بھی ہمیں بندش غم کب تھی گوارا

    پردے میں تری کاکل پرخم تو نہیں ہے

    اب کارگہ دہر میں لگتا ہے بہت دل

    اے دوست کہیں یہ بھی ترا غم تو نہیں ہے

    صحرا میں بگولا بھی ہے مجروحؔ صبا بھی

    ہم سا کوئی آوارۂ عالم تو نہیں ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    مجروح سلطانپوری

    مجروح سلطانپوری

    RECITATIONS

    شکیل جمالی

    شکیل جمالی

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    مجروح سلطانپوری

    مجروح سلطانپوری

    شکیل جمالی

    گو رات مری صبح کی محرم تو نہیں ہے شکیل جمالی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY