ہری سنہری خاک اڑانے والا میں

راجیندر منچندا بانی

ہری سنہری خاک اڑانے والا میں

راجیندر منچندا بانی

MORE BYراجیندر منچندا بانی

    ہری سنہری خاک اڑانے والا میں

    شفق شجر تصویر بنانے والا میں

    خلا کے سارے رنگ سمیٹنے والی شام

    شب کی مژہ پر خواب سجانے والا میں

    فضا کا پہلا پھول کھلانے والی صبح

    ہوا کے سر میں گیت ملانے والا میں

    باہر بھیتر فصل اگانے والا تو

    ترے خزانے سدا لٹانے والا میں

    چھتوں پہ بارش دور پہاڑی ہلکی دھوپ

    بھیگنے والا پنکھ سکھانے والا میں

    چار دشائیں جب آپس میں گھل مل جائیں

    سناٹے کو دعا بنانے والا میں

    گھنے بنوں میں شنکھ بجانے والا تو

    تری طرف گھر چھوڑ کے آنے والا میں

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    ہری سنہری خاک اڑانے والا میں نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے