جیون ہے پل پل کی الجھن کس کس پل کی بات کریں

ولاس پنڈت مسافر

جیون ہے پل پل کی الجھن کس کس پل کی بات کریں

ولاس پنڈت مسافر

MORE BYولاس پنڈت مسافر

    جیون ہے پل پل کی الجھن کس کس پل کی بات کریں

    ان لمحوں کو بھول کے ہم تم گیت غزل کی بات کریں

    روز ہی پینا روز پلانا روز غموں سے ٹکرانا

    اک دن مے کو بھول کے آؤ گنگا جل کی بات کریں

    سو برسوں کے اس جینے سے حاصل کیا ہو پائے گا

    جس نے دل کو خوشیاں دی ہوں اس اک پل کی بات کریں

    کیا پایا ہے بھیڑ میں کھو کر کیا پایہ تنہائی میں

    آؤ یارو ان رسموں کے پھیر بدل کی بات کریں

    آج وفا کی راہ مسافرؔ دھندلی دھندلی لگتی ہے

    کہرہ جس نے برسایا ہے اس بادل کی بات کریں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY