جن کے ہونٹوں پہ ہنسی پاؤں میں چھالے ہوں گے

پرواز جالندھری

جن کے ہونٹوں پہ ہنسی پاؤں میں چھالے ہوں گے

پرواز جالندھری

MORE BYپرواز جالندھری

    جن کے ہونٹوں پہ ہنسی پاؤں میں چھالے ہوں گے

    ہاں وہی لوگ تمہیں چاہنے والے ہوں گے

    مے برستی ہے فضاؤں پہ نشہ طاری ہے

    میرے ساقی نے کہیں جام اچھالے ہوں گے

    شمع وہ لائے ہیں ہم جلوہ گاہ جاناں سے

    اب دو عالم میں اجالے ہی اجالے ہوں گے

    ان سے مفہوم غم زیست ادا ہو شاید

    اشک جو دامن مژگاں نے سنبھالے ہوں گے

    ہم بڑے ناز سے آئے تھے تری محفل میں

    کیا خبر تھی لب اظہار پہ تالے ہوں گے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    غلام علی

    غلام علی

    مآخذ:

    • کتاب : Ghazal Calendar-2015 (Pg. 13.03.2015)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY