کبھی سایہ ہے کبھی دھوپ مقدر میرا

اطہر نفیس

کبھی سایہ ہے کبھی دھوپ مقدر میرا

اطہر نفیس

MORE BYاطہر نفیس

    کبھی سایہ ہے کبھی دھوپ مقدر میرا

    ہوتا رہتا ہے یوں ہی قرض برابر میرا

    ٹوٹ جاتے ہیں کبھی میرے کنارے مجھ میں

    ڈوب جاتا ہے کبھی مجھ میں سمندر میرا

    کسی صحرا میں بچھڑ جائیں گے سب یار مرے

    کسی جنگل میں بھٹک جائے گا لشکر میرا

    باوفا تھا تو مجھے پوچھنے والے بھی نہ تھے

    بے وفا ہوں تو ہوا نام بھی گھر گھر میرا

    کتنے ہنستے ہوئے موسم ابھی آتے لیکن

    ایک ہی دھوپ نے کمھلا دیا منظر میرا

    آخری جرعہء پر کیف ہو شاید باقی

    اب جو چھلکا تو چھلک جائے گا ساغر میرا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    نامعلوم

    نامعلوم

    سدیپ بنرجی

    سدیپ بنرجی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    کبھی سایہ ہے کبھی دھوپ مقدر میرا نعمان شوق

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY