شوخی شباب حسن تبسم حیا کے ساتھ

کنور مہیندر سنگھ بیدی سحر

شوخی شباب حسن تبسم حیا کے ساتھ

کنور مہیندر سنگھ بیدی سحر

MORE BYکنور مہیندر سنگھ بیدی سحر

    شوخی شباب حسن تبسم حیا کے ساتھ

    دل لے لیا ہے آپ نے کس کس ادا کے ساتھ

    ہر لمحہ مانگتے ہیں دعا دید یار کی

    یاد بتاں بھی دل میں ہے یاد خدا کے ساتھ

    تیر نگاہ لطف و کرم سے نہ بچ سکا

    جو مر سکا نہ خنجر جور و جفا کے ساتھ

    افشائے راز عشق کا مجھ سے ہو کیا گلہ

    کیا تم چھپا سکے ہو اسے اس حیا کے ساتھ

    دل کامیاب ہے نہ نظر باریاب ہے

    پالا پڑا ہے عشق میں کس بے وفا کے ساتھ

    اے محتسب ہمارے گنہ ہیں بجا مگر

    رحمت کا باب کھلتا ہے ہر اک خطا کے ساتھ

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    شوخی شباب حسن تبسم حیا کے ساتھ نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY