تمہاری یاد میں دنیا کو ہوں بھلائے ہوئے

اثر صہبائی

تمہاری یاد میں دنیا کو ہوں بھلائے ہوئے

اثر صہبائی

MORE BYاثر صہبائی

    تمہاری یاد میں دنیا کو ہوں بھلائے ہوئے

    تمہارے درد کو سینے سے ہوں لگائے ہوئے

    عجیب سوز سے لبریز ہیں مرے نغمے

    کہ ساز دل ہے محبت کی چوٹ کھائے ہوئے

    جو تجھ سے کچھ بھی نہ ملنے پہ خوش ہیں اے ساقی

    کچھ ایسے رند بھی ہیں مے کدے میں آئے ہوئے

    تمہارے ایک تبسم نے دل کو لوٹ لیا

    رہے لبوں پہ ہی شکوے لبوں پہ آئے ہوئے

    اثرؔ بھی راہرو دشت زندگانی ہے

    پہاڑ غم کا دل زار پر اٹھائے ہوئے

    مأخذ :
    • کتاب : awarq-e- gul (Pg. 42)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY