آنکھوں کی دہلیز پے آ کر بیٹھ گئی

ارشاد خان سکندر

آنکھوں کی دہلیز پے آ کر بیٹھ گئی

ارشاد خان سکندر

MORE BYارشاد خان سکندر

    آنکھوں کی دہلیز پے آ کر بیٹھ گئی

    تیری صورت خواب سجا کر بیٹھ گئی

    کل تیری تصویر مکمل کی میں نے

    فوراً اس پر تتلی آ کر بیٹھ گئی

    تانا بانا بنتے بنتے ہم ادھڑے

    حسرت پھر تھک کر غش کھا کر بیٹھ گئی

    کھوج رہا ہے آج بھی وہ گولر کا پھول

    دنیا تو افواہ اڑا کر بیٹھ گئی

    رونے کی ترکیب ہمارے آئی کام

    غم کی مٹی پانی پا کر بیٹھ گئی

    وہ بھی لڑتے لڑتے جگ سے ہار گیا

    چاہت بھی گھر بار لٹا کر بیٹھ گئی

    بوڑھی ماں کا شاید لوٹ آیا بچپن

    گڑیوں کا انبار لگا کر بیٹھ گئی

    اب کے چراغوں نے چونکایا دنیا کو

    آندھی آخر میں جھنجھلا کر بیٹھ گئی

    ایک سے بڑھ کر ایک تھے داؤں شرافت کے

    جیت مگر ہم سے کترا کر بیٹھ گئی

    تیرے شہر سے ہو کر آئی تیز ہوا

    پھر دل کی بنیاد ہلا کر بیٹھ گئی

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    ارشاد خان سکندر

    ارشاد خان سکندر

    ارشاد خان سکندر

    ارشاد خان سکندر

    RECITATIONS

    ارشاد خان سکندر

    ارشاد خان سکندر

    ارشاد خان سکندر

    آنکھوں کی دہلیز پے آ کر بیٹھ گئی ارشاد خان سکندر

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY