اب کے موسم میں ترا شہر وہ کیسا ہوگا

نعیم سرمد

اب کے موسم میں ترا شہر وہ کیسا ہوگا

نعیم سرمد

MORE BYنعیم سرمد

    اب کے موسم میں ترا شہر وہ کیسا ہوگا

    میری مرضی کے بنا چاند نکلتا ہوگا

    کیسے کہہ دوں کہ مجھے کس نے ہیں برباد کیا

    اپنا آیا ہو مری بات سے رخصت ہوگا

    یہ کوئی بات ہے جو تجھ کو بتائی جائے

    شام کے وقت اداسی کا سبب کیا ہوگا

    اب کی سردی میں کہاں ہے وہ الاؤ سینہ

    اب کی سردی میں مجھے خود کو جلانا ہوگا

    تجھ سے ملنے کی کئی دن سے تمنا ہے مجھے

    تو کبھی جسم سے باہر تو نکلتا ہوگا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY