عدو کے تاکنے کو تم ادھر دیکھو ادھر دیکھو

بیخود دہلوی

عدو کے تاکنے کو تم ادھر دیکھو ادھر دیکھو

بیخود دہلوی

MORE BY بیخود دہلوی

    عدو کے تاکنے کو تم ادھر دیکھو ادھر دیکھو

    مگر ہم تم کو دیکھے جائیں تم چاہو جدھر دیکھو

    لڑائی سے یوں ہی تو روکتے رہتے ہیں ہم تم کو

    کہ دل کا بھید کہہ دیتی ہے تم چاہو جدھر دیکھو

    ادائیں دیکھنے بیٹھے ہو کیا آئینہ میں اپنی

    دیا ہے جس نے تم جیسے کو دل اس کا جگر دیکھو

    سوال وصل پر کچھ سوچ کر اس نے کہا مجھ سے

    ابھی وعدہ تو کر سکتے نہیں ہیں ہم مگر دیکھو

    نہ کرنا ترک بیخودؔ محتسب کے ڈر سے مے خواری

    کہیں دھبا لگا لینا نہ اپنے نام پر دیکھو

    مآخذ:

    • Book : Intekhab-e-Sukhan(Jild-2) (Pg. 175)
    • Author : Hasrat Mohani
    • مطبع : uttar pradesh urdu academy (1983)
    • اشاعت : 1983

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY