انا منہ آنسوؤں سے دھو رہی ہے

احمد اشفاق

انا منہ آنسوؤں سے دھو رہی ہے

احمد اشفاق

MORE BYاحمد اشفاق

    انا منہ آنسوؤں سے دھو رہی ہے

    ضرورت سر بہ سجدہ ہو رہی ہے

    مری دشمن مری بے باک گوئی

    مری راہوں میں کانٹے بو رہی ہے

    ریا کاری لیے جاتی ہے سبقت

    حقیقت سر جھکائے رو رہی ہے

    مسلسل اک اذیت زندگانی

    غموں کے بوجھ سر پر ڈھو رہی ہے

    زمانہ مصلحت پرور ہوا ہے

    ضرورت آدمیت کھو رہی ہے

    کسی کی شخصیت مجروح کر دی

    زمانے بھر میں شہرت ہو رہی ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY