بہ رنگ نغمہ بکھر جانا چاہتے ہیں ہم

والی آسی

بہ رنگ نغمہ بکھر جانا چاہتے ہیں ہم

والی آسی

MORE BYوالی آسی

    بہ رنگ نغمہ بکھر جانا چاہتے ہیں ہم

    کسی کے دل میں اتر جانا چاہتے ہیں ہم

    زمانہ اور ابھی ٹھوکریں لگائے ہمیں

    ابھی کچھ اور سنور جانا چاہتے ہیں ہم

    اسی طرف ہمیں جانے سے روکتا ہے کوئی

    وہ ایک سمت جدھر جانا چاہتے ہیں ہم

    وہاں ہمارا کوئی منتظر نہیں پھر بھی

    ہمیں نہ روک کہ گھر جانا چاہتے ہیں ہم

    ندی کے پار کھڑا ہے کوئی چراغ لیے

    ندی کے پار اتر جانا چاہتے ہیں ہم

    انہیں بھی جینے کے کچھ تجربے ہوئے ہوں گے

    جو کہہ رہے ہیں کہ مر جانا چاہتے ہیں ہم

    کچھ اس ادا سے کہ کوئی چراغ بھی نہ بجھے

    ہوا کی طرح گزر جانا چاہتے ہیں ہم

    زیادہ عمر تو ہوتی نہیں گلوں کی مگر

    گلوں کی طرح نکھر جانا چاہتے ہیں ہم

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    بہ رنگ نغمہ بکھر جانا چاہتے ہیں ہم نعمان شوق

    مآخذ:

    • کتاب : Mom (Pg. 35)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY