برسات کا مزا ترے گیسو دکھا گئے

لالہ مادھو رام جوہر

برسات کا مزا ترے گیسو دکھا گئے

لالہ مادھو رام جوہر

MORE BY لالہ مادھو رام جوہر

    برسات کا مزا ترے گیسو دکھا گئے

    عکس آسمان پر جو پڑا ابر چھا گئے

    آئے کبھی تو سیکڑوں باتیں سنا گئے

    قربان ایسے آنے کے کیا آئے کیا گئے

    سن پائی میری آبلہ پائی کی جب خبر

    چاروں طرف وہ راہ میں کانٹے بچھا گئے

    ہم وہ نہیں سنیں جو برائی حضور کی

    یہ آپ تھے جو غیر کی باتوں میں آ گئے

    میں نے جو تخلیہ میں کہا حال دل کبھی

    منہ سے نہ کچھ جواب دیا مسکرا گئے

    مآخذ:

    • کتاب : Intekhab Kalam Lala M.R Jauhar (Pg. 70)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY