دن میں اس طرح مرے دل میں سمایا سورج

آزاد گلاٹی

دن میں اس طرح مرے دل میں سمایا سورج

آزاد گلاٹی

MORE BYآزاد گلاٹی

    دن میں اس طرح مرے دل میں سمایا سورج

    رات آنکھوں کے افق پر ابھر آیا سورج

    اپنی تو رات بھی جلتے ہی کٹی دن کی طرح

    رات کو سو تو گیا دن کا ستایا سورج

    صبح نکلا کسی دلہن کی دمک رخ پہ لیے

    شام ڈوبا کسی بیوہ سا بجھایا سورج

    رات کو میں مرا سایا تھے اکٹھے دونوں

    لے گیا چھین کے دن کو مرا سایا سورج

    دن گزرتا نہ تھا کم بخت کا تنہا جلتے

    وادئ شب سے مجھے ڈھونڈ کے لایا سورج

    تو نے جس دن سے مجھے سونپ دیا ظلمت کو

    تب سے دن میں بھی نہ مجھ کو نظر آیا سورج

    آسماں ایک سلگتا ہوا صحرا ہے جہاں

    ڈھونڈھتا پھرتا ہے خود اپنا ہی سایا سورج

    دن کو جس نے ہمیں نیزوں پہ چڑھائے رکھا

    شب کو ہم نے وہی پلکوں پہ سلایا سورج

    موضوعات:

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY