ایک صورت نظر آئی تھی ابھی

کرار نوری

ایک صورت نظر آئی تھی ابھی

کرار نوری

MORE BYکرار نوری

    ایک صورت نظر آئی تھی ابھی

    دل نے تصویر بنائی تھی ابھی

    کون ہو سکتا ہے آنے والا

    ایک آواز سی آئی تھی ابھی

    ایک صورت تھی کہ دل ہی دل میں

    ایک صورت سے ملائی تھی ابھی

    سب کی آنکھوں میں نظر آنے لگی

    دل میں صورت جو چھپائی تھی ابھی

    بات کہتے ہی ذرا کھو سے گئے

    بات مشکل سے بنائی تھی ابھی

    پھر وفادار نظر آنے لگا

    بے وفا جس سے لڑائی تھی ابھی

    ساتھ اپنے وہ خدا تھا شاید

    ساتھ اپنے جو خدائی تھی ابھی

    مأخذ :
    • کتاب : Meri Gazal (Pg. 75)
    • Author : karar Noori
    • مطبع : Rooh-e-Asar (Ishaat Ghar) (1983)
    • اشاعت : 1983

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY