گاؤں کی آنکھ سے بستی کی نظر سے دیکھا

اسعد بدایونی

گاؤں کی آنکھ سے بستی کی نظر سے دیکھا

اسعد بدایونی

MORE BYاسعد بدایونی

    گاؤں کی آنکھ سے بستی کی نظر سے دیکھا

    ایک ہی رنگ ہے دنیا کو جدھر سے دیکھا

    ہم سے اے حسن ادا کب ترا حق ہو پایا

    آنکھ بھر تجھ کو بزرگوں کے نہ ڈر سے دیکھا

    اپنی بانہوں کی طرح مجھ کو لگیں سب شاخیں

    چاند الجھا ہوا جس رات شجر سے دیکھا

    ہم کسی جنگ میں شامل نہ ہوئے بس ہم نے

    ہر تماشے کو فقط راہ گزر سے دیکھا

    ہر چمکتے ہوئے منظر سے رہے ہم ناراض

    سارے چہروں کو سدا دیدۂ تر سے دیکھا

    پھول سے بچوں کے شانوں پہ تھے بھاری بستے

    ہم نے اسکول کو دشمن کی نظر سے دیکھا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY