ہر چند سہارا ہے ترے پیار کا دل کو

شہرت بخاری

ہر چند سہارا ہے ترے پیار کا دل کو

شہرت بخاری

MORE BY شہرت بخاری

    ہر چند سہارا ہے ترے پیار کا دل کو

    رہتا ہے مگر ایک عجب خوف سا دل کو

    وہ خواب کہ دیکھا نہ کبھی لے اڑا نیندیں

    وہ درد کہ اٹھا نہ کبھی کھا گیا دل کو

    یا سانس کا لینا بھی گزر جانا ہے جی سے

    یا معرکۂ عشق بھی اک کھیل تھا دل کو

    وہ آئیں تو حیران وہ جائیں تو پریشان

    یارب کوئی سمجھائے یہ کیا ہو گیا دل کو

    سونے نہ دیا شورش ہستی نے گھڑی بھر

    میں لاکھ ترا ذکر سناتا رہا دل کو

    روداد محبت نہ رہی اس کے سوا یاد

    اک اجنبی آیا تھا اڑا لے گیا دل کو

    جز گرد خموشی نہیں شہرتؔ یہاں کچھ بھی

    کس منزل آباد میں پہنچا لیا دل کو

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    نیرہ نور

    نیرہ نور

    ذریعہ:

    • Book: Ghazal Calendar-2015 (Pg. 04.08.2015)
    0
    COMMENT
    COMMENTS
    تبصرے دیکھیے

    Critique mode ON

    Tap on any word to submit a critique about that line. Word-meanings will not be available while you’re in this mode.

    OKAY

    SUBMIT CRITIQUE

    نام

    ای-میل

    تبصره

    Thanks, for your feedback

    Critique draft saved

    EDIT DISCARD

    CRITIQUE MODE ON

    TURN OFF

    Discard saved critique?

    CANCEL DISCARD

    CRITIQUE MODE ON - Click on a line of text to critique

    TURN OFF

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed form your favorites