ہر حقیقت مجاز ہو جائے

فیض احمد فیض

ہر حقیقت مجاز ہو جائے

فیض احمد فیض

MORE BYفیض احمد فیض

    ہر حقیقت مجاز ہو جائے

    کافروں کی نماز ہو جائے

    دل رہین نیاز ہو جائے

    بیکسی کارساز ہو جائے

    منت چارہ ساز کون کرے

    درد جب جاں نواز ہو جائے

    عشق دل میں رہے تو رسوا ہو

    لب پہ آئے تو راز ہو جائے

    لطف کا انتظار کرتا ہوں

    جور تا حد ناز ہو جائے

    عمر بے سود کٹ رہی ہے فیضؔ

    کاش افشائے راز ہو جائے

    مأخذ :
    • کتاب : Nuskha Hai Wafa (Pg. 29)

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY