ہزار نقص ہیں مجھ میں مرے کمال کو دیکھ

سکندر علی وجد

ہزار نقص ہیں مجھ میں مرے کمال کو دیکھ

سکندر علی وجد

MORE BY سکندر علی وجد

    ہزار نقص ہیں مجھ میں مرے کمال کو دیکھ

    مجھے نہ دیکھ دلآویزی خیال کو دیکھ

    گدائے حسن ترا خوگر سوال نہیں

    نگاہ شوق میں رعنائی سوال کو دیکھ

    نسیم صبح کی اٹکھیلیوں سے برہم ہے

    چمن میں پھول کے چہرے پہ اشتعال کو دیکھ

    غبار رند ہے یا خاک ساقی مہوش

    ادب سے چوم کے ہر ساغر سفال کو دیکھ

    خیال عیش میں بھی کیف آرزو نہ رہا

    حیات سوزی زہراب انفعال کو دیکھ

    ہجوم جلوہ بد اماں ادائے خود بینی

    نگاہ صبر سے آرائش جمال کو دیکھ

    تمیز خواب و حقیقت ہے شرط بیداری

    خیال عظمت ماضی کو چھوڑ حال کو دیکھ

    رہے گی وجدؔ تری کائنات دل برہم

    کہا تھا کس نے کہ اس حسن بے مثال کو دیکھ

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    ہزار نقص ہیں مجھ میں مرے کمال کو دیکھ نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY