حسن پر زیبا نہیں یہ لن ترانی آپ کی

لالہ مادھو رام جوہر

حسن پر زیبا نہیں یہ لن ترانی آپ کی

لالہ مادھو رام جوہر

MORE BYلالہ مادھو رام جوہر

    حسن پر زیبا نہیں یہ لن ترانی آپ کی

    چار دن کی چاندنی ہے نوجوانی آپ کی

    ہم بھی کچھ منہ سے جو کہہ بیٹھیں تو پھر کتنی رہے

    دیکھیے اچھی نہیں یہ بد زبانی آپ کی

    کچھ سمجھ میں حال یہ آتا نہیں حیران ہوں

    آج ہے کیسی یہ مجھ پر مہربانی آپ کی

    باز آئے ہم یہ اپنا آپ چھلا لیجیے

    ہر کسی کے ہاتھ میں ہے اب نشانی آپ کی

    راہ میں بھی دیکھ کر منہ پھیر لیتے ہیں حضور

    آج کل ہے کس قدر نامہربانی آپ کی

    دو گھڑی اک رنگ پر قائم نہیں حسن شباب

    کیا مصور کھینچے تصویر جوانی آپ کی

    آب حیواں ہے کہیں زہر ہلاہل ہے کہیں

    تلخ گوئی آپ کی شیری زبانی آپ کی

    خواب میں ہم کو نہ آنے دیتے تو ہم جانتے

    کی رقیبوں نے یہ کیسی پاسبانی آپ کی

    اپنے مرنے کا نہیں غم رنج ہے اس بات کا

    آج انگلی سے اترتی ہے نشانی آپ کی

    حال دل سنتے نہیں یہ کہہ کے خوش کر دیتے ہیں

    پھر کبھی فرصت میں سن لیں گے کہانی آپ کی

    ہم کو یہ دولت کبھی ملتی تو ہم بھی جانتے

    ہوگی جس کے واسطے ہوگی جوانی آپ کی

    مأخذ :
    • کتاب : Intekhab Kalam Lala M.R Jauhar (Pg. 55)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY