ان موسموں میں ناچتے گاتے رہیں گے ہم

احمد مشتاق

ان موسموں میں ناچتے گاتے رہیں گے ہم

احمد مشتاق

MORE BYاحمد مشتاق

    ان موسموں میں ناچتے گاتے رہیں گے ہم

    ہنستے رہیں گے شور مچاتے رہیں گے ہم

    لب سوکھ کیوں نہ جائیں گلا بیٹھ کیوں نہ جائے

    دل میں ہیں جو سوال اٹھاتے رہیں گے ہم

    اپنی رہ سلوک میں چپ رہنا منع ہے

    چپ رہ گئے تو جان سے جاتے رہیں گے ہم

    نکلے تو اس طرح کہ دکھائی نہیں دیے

    ڈوبے تو دیر تک نظر آتے رہیں گے ہم

    دکھ کے سفر پہ دل کو روانہ تو کر دیا

    اب ساری عمر ہاتھ ہلاتے رہیں گے ہم

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    ان موسموں میں ناچتے گاتے رہیں گے ہم نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY