اتنا بے آسرا نہیں ہوں میں

پرویز ساحر

اتنا بے آسرا نہیں ہوں میں

پرویز ساحر

MORE BYپرویز ساحر

    اتنا بے آسرا نہیں ہوں میں

    آدمی ہوں خدا نہیں ہوں میں

    ہے ابھی میری جستجو جاری

    یعنی خود کو ملا نہیں ہوں میں

    میں نے دعویٰ کیا نہ ہونے کا

    مجھ کو معلوم تھا نہیں ہوں میں

    نکل آیا میں ذات سے باہر

    اپنے اندر رہا نہیں ہوں میں

    میں جو ہوں میں بھی اصل میں تم ہوں

    میری جاں دوسرا نہیں ہوں میں

    تم مجھے جان ہی نہیں سکتے

    عکس ہوں آئنا نہیں ہوں میں

    ہوں برا، مانتا ہوں میں لیکن

    اس قدر بھی برا نہیں ہوں میں

    دوسروں کی تو بات ہی ہے الگ

    اپنا بھی ہم نوا نہیں ہوں میں

    راز سر بستہ کی طرح ساحرؔ

    ابھی خود پر کھلا نہیں ہوں میں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY