جانب در دیکھنا اچھا نہیں

عبد اللہ جاوید

جانب در دیکھنا اچھا نہیں

عبد اللہ جاوید

MORE BY عبد اللہ جاوید

    جانب در دیکھنا اچھا نہیں

    راہ شب بھر دیکھنا اچھا نہیں

    عاشقی کی سوچنا تو ٹھیک ہے

    عاشقی کر دیکھنا اچھا نہیں

    اذن جلوہ ہے جھلک بھر کے لیے

    آنکھ بھر کر دیکھنا اچھا نہیں

    اک طلسمی شہر ہے یہ زندگی

    پیچھے مڑ کر دیکھنا اچھا نہیں

    اپنے باہر دیکھ کر ہنس بول لیں

    اپنے اندر دیکھنا اچھا نہیں

    پھر نئی ہجرت کوئی درپیش ہے

    خواب میں گھر دیکھنا اچھا نہیں

    سر بدن پر دیکھیے جاویدؔ جی

    ہاتھ میں سر دیکھنا اچھا نہیں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY