اے دل بے قرار چپ ہو جا

ساغر صدیقی

اے دل بے قرار چپ ہو جا

ساغر صدیقی

MORE BYساغر صدیقی

    اے دل بے قرار چپ ہو جا

    جا چکی ہے بہار چپ ہو جا

    اب نہ آئیں گے روٹھنے والے

    دیدۂ اشک بار چپ ہو جا

    جا چکا کاروان لالہ و گل

    اڑ رہا ہے غبار چپ ہو جا

    چھوٹ جاتی ہے پھول سے خوشبو

    روٹھ جاتے ہیں یار چپ ہو جا

    ہم فقیروں کا اس زمانے میں

    کون ہے غم گسار چپ ہو جا

    حادثوں کی نہ آنکھ کھل جائے

    حسرت سوگوار چپ ہو جا

    گیت کی ضرب سے بھی اے ساغرؔ

    ٹوٹ جاتے ہیں تار چپ ہو جا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY