خوشی سے یا بہ مجبوری قفس سے آشیاں بدلا

محضر لکھنوی

خوشی سے یا بہ مجبوری قفس سے آشیاں بدلا

محضر لکھنوی

MORE BYمحضر لکھنوی

    خوشی سے یا بہ مجبوری قفس سے آشیاں بدلا

    مگر اس وقت جب سارا نظام گلستاں بدلا

    قفس سے آشیاں تبدیل کرنا بات ہی کیا تھی

    ہمیں دیکھو کہ ہم نے بجلیوں سے آشیاں بدلا

    بڑی دشواریاں پیش آئیں منزل تک پہنچنے میں

    کبھی یہ کارواں بدلا کبھی وہ کارواں بدلا

    مأخذ :
    • Ghazal Encyclopaedia

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY