کوئی سمجھے گا کیا راز گلشن

فنا نظامی کانپوری

کوئی سمجھے گا کیا راز گلشن

فنا نظامی کانپوری

MORE BYفنا نظامی کانپوری

    کوئی سمجھے گا کیا راز گلشن

    جب تک الجھے نہ کانٹوں سے دامن

    یک بیک سامنے آ نہ جانا

    رک نہ جائے کہیں دل کی دھڑکن

    گل تو گل خار تک چن لیے ہیں

    پھر بھی خالی ہے گلچیں کا دامن

    کتنی آرائش آشیانہ

    ٹوٹ جائے نہ شاخ نشیمن

    عظمت آشیانہ بڑھا دی

    برق کو دوست سمجھوں کہ دشمن

    ان گلوں سے تو کانٹے ہی اچھے

    جن سے ہوتی ہو توہین گلشن

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY