کنج قفس سے پہلے گھر اپنا کہاں نہ تھا

لالہ مادھو رام جوہر

کنج قفس سے پہلے گھر اپنا کہاں نہ تھا

لالہ مادھو رام جوہر

MORE BYلالہ مادھو رام جوہر

    کنج قفس سے پہلے گھر اپنا کہاں نہ تھا

    آئے یہاں تو حوصلۂ آشیاں نہ تھا

    تجھ کو سمجھ کے خواب میں پہنچا میں جس جگہ

    دیکھا جو آنکھ کھول کے تو کچھ وہاں نہ تھا

    اک اک قدم پہ اب تو قیامت کی دھوم ہے

    آگے تو یہ چلن کبھی اے جان جاں نہ تھا

    ٹھہری جو وصل کی تو ہوئی صبح شام سے

    بت مہرباں ہوئے تو خدا مہرباں نہ تھا

    کیونکر قسم پہ آج مجھے اعتبار آئے

    کس دن خدا تمہارے مرے درمیاں نہ تھا

    توڑا جو پھول بلبل شیدا کے سامنے

    کیا تیرے دل میں درد کچھ اے باغباں نہ تھا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY