میں روؤں ہوں رونا مجھے بھائے ہے

کلیم عاجز

میں روؤں ہوں رونا مجھے بھائے ہے

کلیم عاجز

MORE BYکلیم عاجز

    میں روؤں ہوں رونا مجھے بھائے ہے

    کسی کا بھلا اس میں کیا جائے ہے

    دل آئے ہے پھر دل میں درد آئے ہے

    یوں ہی بات میں بات بڑھ جائے ہے

    کوئی دیر سے ہاتھ پھیلائے ہے

    وہ نامہرباں آئے ہے جائے ہے

    محبت میں دل جائے گر جائے ہے

    جو کھوئے نہیں ہے وہ کیا پائے ہے

    جنوں سب اشارے میں کہہ جائے ہے

    مگر عقل کو کب سمجھ آئے ہے

    پکاروں ہوں لیکن نہ باز آئے ہے

    یہ دنیا کہاں ڈوبنے جائے ہے

    خموشی میں ہر بات بن جائے ہے

    جو بولے ہے دیوانہ کہلائے ہے

    قیامت جہاں آئے گی آئے گی

    یہاں صبح آئے ہے شام آئے ہے

    جنوں ختم دار و رسن پر نہیں

    یہ رستہ بہت دور تک جائے ہے

    مآخذ:

    • کتاب : Jab Fasl-e-baharn aai thi (Pg. 178)
    • Author : padm Shri Dr. Kaleem Ahmed Aajiz
    • مطبع : Sunrise Plastic Works, Patna (1990)
    • اشاعت : 1990

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY