میں صرف وہ نہیں جو نظر آ گیا تجھے

دل ایوبی

میں صرف وہ نہیں جو نظر آ گیا تجھے

دل ایوبی

MORE BYدل ایوبی

    میں صرف وہ نہیں جو نظر آ گیا تجھے

    مژدہ پھر اذن بار دگر آ گیا تجھے

    صحرا میں جان دینے کے موقعے تو اب بھی ہیں

    وہ کیا جنوں تھا لے کے جو گھر آ گیا تجھے

    پہلے کبھی تو موت کو تجھ سے گلہ نہ تھا

    جینے کا آج کیسے ہنر آ گیا تجھے

    اس دور میں یہ فخر بھی کس کو نصیب ہے

    چہرہ تو آئینہ میں نظر آ گیا تجھے

    اس شہر میں تو کچھ نہیں رسوائی کے سوا

    اے دلؔ یہ عشق لے کے کدھر آ گیا تجھے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY