نہ اتنا چاہئے اے پر شکم خواب

شیخ ظہور الدین حاتم

نہ اتنا چاہئے اے پر شکم خواب

شیخ ظہور الدین حاتم

MORE BY شیخ ظہور الدین حاتم

    نہ اتنا چاہئے اے پر شکم خواب

    کہ تیرے حق میں ہے ظالم ستم خواب

    خیال ماہ رو میں تا دم صبح

    نہ آیا رات مجھ کو ایک دم خواب

    کہو تو کس طرح آوے وہاں نیند

    جہاں خورشید رو ہو آ کے ہم خواب

    پلک لگتے نہیں کیا اڑ گیا ہے

    نصیبوں کا ترے اے چشم نم خواب

    ہمیں بہتر ہے سونا جاگنے سے

    بھلاتا ہے ہمارا درد و غم خواب

    کہے تھا رات کو حاتمؔ سے مضموںؔ

    مجھے مخمل اوپر آتا ہے کم خواب

    مآخذ:

    • Book : Diwan Zadah (Pg. 145)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY