ختم چھٹی مدرسے کا در کھلا

کیف احمد صدیقی

ختم چھٹی مدرسے کا در کھلا

کیف احمد صدیقی

MORE BYکیف احمد صدیقی

    ختم چھٹی مدرسے کا در کھلا

    عقل و دانش علم و فن کا گھر کھلا

    پھر وہی اسکول کی سرگرمیاں

    پھر وہی تعلیم کا دفتر کھلا

    میری تعلیمی لیاقت کا بھرم

    امتحاں کے بعد ہی اکثر کھلا

    ماسٹر صاحب کے غصے کا سبب

    بے خطا معصوم بچوں پر کھلا

    میری آنکھیں نیند سے بوجھل ہوئیں

    جب نظر آیا کوئی بستر کھلا

    چاند تاروں کو ہنسی آنے لگی

    میرا بستہ جب کھلی چھت پر کھلا

    جی میں آتا ہے لگاؤں اک چپت

    دیکھتا ہوں جب کسی کا سر کھلا

    کیفؔ میری ناک میں دم آ گیا

    جب کبھی مجھ سے کوئی ٹیچر کھلا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY