شب ہجر میں یاد آنا کسی کا

مرلی دھر شاد

شب ہجر میں یاد آنا کسی کا

مرلی دھر شاد

MORE BYمرلی دھر شاد

    شب ہجر میں یاد آنا کسی کا

    ستائے ہوئے کو ستانا کسی کا

    کبھی پیار کی باتیں وہ چپکے چپکے

    کبھی ناز سے روٹھ جانا کسی کا

    وہ بھولی ادائیں نہ کیوں یاد آئیں

    لڑکپن میں تھا کیا زمانہ کسی کا

    کبھی تھی وہ غصہ کی چتون قیامت

    کبھی عاجزی سے منانا کسی کا

    وہ دل بن کے دام محبت میں آیا

    کہ زلفوں میں تھا آشیانا کسی کا

    نظر لگ گئی میرے دشمن کی مجھ کو

    قیامت ہوا روٹھ جانا کسی کا

    کھلائے گا گل رنگ لائے گا اے شادؔ

    تجھے دیکھ کر مسکرانا کسی کا

    مأخذ :
    • کتاب : Mujalla Dastavez (Pg. 152)
    • Author : Aziz Nabeel
    • مطبع : Edarah Dastavez (2013-14)
    • اشاعت : 2013-14

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY