سخن حق کو فضیلت نہیں ملنے والی

افتخار عارف

سخن حق کو فضیلت نہیں ملنے والی

افتخار عارف

MORE BY افتخار عارف

    سخن حق کو فضیلت نہیں ملنے والی

    صبر پر داد شجاعت نہیں ملنے والی

    وقت معلوم کی دہشت سے لرزتا ہوا دل

    ڈوبا جاتا ہے کہ مہلت نہیں ملنے والی

    زندگی نذر گزاری تو ملی چادر خاک

    اس سے کم پر تو یہ نعمت نہیں ملنے والی

    راس آنے لگی دنیا تو کہا دل نے کہ جا

    اب تجھے درد کی دولت نہیں ملنے والی

    ہوس لقمۂ تر کھا گئی لہجے کا جلال

    اب کسی حرف کو حرمت نہیں ملنے والی

    گھر سے نکلے ہوئے بیٹوں کا مقدر معلوم

    ماں کے قدموں میں بھی جنت نہیں ملنے والی

    زندگی بھر کی کمائی یہی مصرعے دو چار

    اس کمائی پہ تو عزت نہیں ملنے والی

    RECITATIONS

    افتخار عارف

    افتخار عارف

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    افتخار عارف

    سخن حق کو فضیلت نہیں ملنے والی افتخار عارف

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY