آج میں نے اسے نزدیک سے جا دیکھا ہے

کفیل آزر امروہوی

آج میں نے اسے نزدیک سے جا دیکھا ہے

کفیل آزر امروہوی

MORE BYکفیل آزر امروہوی

    آج میں نے اسے نزدیک سے جا دیکھا ہے

    وہ دریچہ تو مرے قد سے بہت اونچا ہے

    اپنے کمرے کو اندھیروں سے بھرا پایا ہے

    تیرے بارے میں کبھی غور سے جب سوچا ہے

    ہر تمنا کو روایت کی طرح توڑا ہے

    تب کہیں جا کے زمانہ مجھے راس آیا ہے

    تم کو شکوہ ہے مرے عہد محبت سے مگر

    تم نے پانی پہ کوئی لفظ کبھی لکھا ہے

    ایسا بچھڑا کہ ملا ہی نہیں پھر اس کا پتہ

    ہائے وہ شخص جو اکثر مجھے یاد آتا ہے

    کوئی اس شخص کو اپنا نہیں کہتا آزرؔ

    اپنے گھر میں بھی وہ غیروں کی طرح رہتا ہے

    مأخذ :
    • کتاب : Dhoop Ka Dareecha (Pg. 134)

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY