تمہیں پانے کی حیثیت نہیں ہے

فریحہ نقوی

تمہیں پانے کی حیثیت نہیں ہے

فریحہ نقوی

MORE BYفریحہ نقوی

    تمہیں پانے کی حیثیت نہیں ہے

    مگر کھونے کی بھی ہمت نہیں ہے

    بہت سوچا بہت سوچا ہے میں نے

    جدائی کے سوا صورت نہیں ہے

    تمہیں روکا تو جا سکتا ہے لیکن

    مرے اعصاب میں قوت نہیں ہے

    مرے اشکو مرے بیکار اشکو!!

    تمہاری اب اسے حاجت نہیں ہے

    ابھی تم گھر سے باہر مت نکلنا

    تمہاری ہوش کی حالت نہیں ہے

    دعا کیا دوں بھلا جاتے ہوئے میں

    تمہیں تکنے سے ہی فرصت نہیں ہے

    محبت کم نہ ہوگی یاد رکھنا!!

    یہ بڑھتی ہے، کہ یہ دولت نہیں ہے

    زمانے اب ترے مد مقابل

    کوئی کمزور سی عورت نہیں ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY