اداس آنکھوں سے آنسو نہیں نکلتے ہیں

بشیر بدر

اداس آنکھوں سے آنسو نہیں نکلتے ہیں

بشیر بدر

MORE BY بشیر بدر

    اداس آنکھوں سے آنسو نہیں نکلتے ہیں

    یہ موتیوں کی طرح سیپیوں میں پلتے ہیں

    گھنے دھوئیں میں فرشتے بھی آنکھ ملتے ہیں

    تمام رات کھجوروں کے پیڑ جلتے ہیں

    میں شاہراہ نہیں راستے کا پتھر ہوں

    یہاں سوار بھی پیدل اتر کے چلتے ہیں

    انہیں کبھی نہ بتانا میں ان کی آنکھوں میں

    وہ لوگ پھول سمجھ کر مجھے مسلتے ہیں

    کئی ستاروں کو میں جانتا ہوں بچپن سے

    کہیں بھی جاؤں مرے ساتھ ساتھ چلتے ہیں

    یہ ایک پیڑ ہے آ اس سے مل کے رو لیں ہم

    یہاں سے تیرے مرے راستے بدلتے ہیں

    مآخذ:

    • Book : Aamad (Pg. 18)
    • Author : Bashir Badar
    • مطبع : M.R. Publications (2009)
    • اشاعت : 2009

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY