اس ستم گر کی مہربانی سے

گلزار دہلوی

اس ستم گر کی مہربانی سے

گلزار دہلوی

MORE BY گلزار دہلوی

    اس ستم گر کی مہربانی سے

    دل الجھتا ہے زندگانی سے

    خاک سے کتنی صورتیں ابھریں

    دھل گئے نقش کتنے پانی سے

    ہم سے پوچھو تو ظلم بہتر ہے

    ان حسینوں کی مہربانی سے

    اور بھی کیا قیامت آئے گی

    پوچھنا ہے تری جوانی سے

    دل سلگتا ہے اشک بہتے ہیں

    آگ بجھتی نہیں ہے پانی سے

    حسرت عمر جاوداں لے کر

    جا رہے ہیں سرائے فانی سے

    ہائے کیا دور زندگی گزرا

    واقعے ہو گئے کہانی سے

    کتنی خوش فہمیوں کے بت توڑے

    تو نے گل زار خوش بیانی سے

    مآخذ:

    • کتاب : Aazadi ke baad dehli men urdu gazal (Pg. 302)
    • Author : Professor Unwan Chishti
    • مطبع : Asila Offset Printers, Kalan Mahal, Dariyaganj, New Delhi-6 (1989)
    • اشاعت : 1989

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY