یہ آنسو بے سبب جاری نہیں ہے

کلیم عاجز

یہ آنسو بے سبب جاری نہیں ہے

کلیم عاجز

MORE BYکلیم عاجز

    یہ آنسو بے سبب جاری نہیں ہے

    مجھے رونے کی بیماری نہیں ہے

    نہ پوچھو زخم ہائے دل کا عالم

    چمن میں ایسی گل کاری نہیں ہے

    بہت دشوار سمجھانا ہے غم کا

    سمجھ لینے میں دشواری نہیں ہے

    غزل ہی گنگنانے دو کہ مجھ کو

    مزاج تلخ گفتاری نہیں ہے

    چمن میں کیوں چلوں کانٹوں سے بچ کر

    یہ آئین وفاداری نہیں ہے

    وہ آئیں قتل کو جس روز چاہیں

    یہاں کس روز تیاری نہیں ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    کلیم عاجز

    کلیم عاجز

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY