یہ محبت کا فسانہ بھی بدل جائے گا

اظہر لکھنوی

یہ محبت کا فسانہ بھی بدل جائے گا

اظہر لکھنوی

MORE BY اظہر لکھنوی

    یہ محبت کا فسانہ بھی بدل جائے گا

    وقت کے ساتھ زمانہ بھی بدل جائے گا

    آج کل میں کوئی طوفان ہے اٹھنے والا

    ہم غریبوں کا ٹھکانہ بھی بدل جائے گا

    مجھ سے للہ نہ سرکار چھڑائیں دامن

    آپ بدلے تو زمانہ بھی بدل جائے گا

    پھر بہار آئی ہے گلشن کا نظارہ کر لو

    ورنہ یہ وقت سہانہ بھی بدل جائے گا

    مفلسی مسند زردار پہ قابض ہوگی

    محل بدلے گا زمانہ بھی بدل جائے گا

    کس کو معلوم تھا انجام یہ ہوگا اظہرؔ

    گھر بدلتے ہی گھرانا بھی بدل جائے گا

    مآخذ:

    • Book : Shora-e-London (Pg. 22)
    • Author : Jauhar Zahiri
    • مطبع : Books From India (U.K) Ltd. 45, Museum Street, Londan W.C-1 (1985)
    • اشاعت : 1985

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY