یہ زلف اگر کھل کے بکھر جائے تو اچھا

ساحر لدھیانوی

یہ زلف اگر کھل کے بکھر جائے تو اچھا

ساحر لدھیانوی

MORE BYساحر لدھیانوی

    دلچسپ معلومات

    Film: Kaajal (1965)

    یہ زلف اگر کھل کے بکھر جائے تو اچھا

    اس رات کی تقدیر سنور جائے تو اچھا

    جس طرح سے تھوڑی سی ترے ساتھ کٹی ہے

    باقی بھی اسی طرح گزر جائے تو اچھا

    دنیا کی نگاہوں میں بھلا کیا ہے برا کیا

    یہ بوجھ اگر دل سے اتر جائے تو اچھا

    ویسے تو تمہیں نے مجھے برباد کیا ہے

    الزام کسی اور کے سر جائے تو اچھا

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    یہ زلف اگر کھل کے بکھر جائے تو اچھا نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY