جیسے اسلام میں ہے رسم مسلمانی کی

ماچس لکھنوی

جیسے اسلام میں ہے رسم مسلمانی کی

ماچس لکھنوی

MORE BYماچس لکھنوی

    جیسے اسلام میں ہے رسم مسلمانی کی

    ویسے ہی عشق میں ہے چاک گریبانی کی

    گت یہی خون کی ہوتی ہے جو ہے پانی کی

    رت بدل جاتی ہے جب فطرت انسانی کی

    حشر میں ہو گئی صحت مرض عصیاں سے

    ایک خوراک دوا پی کے پشیمانی کی

    سوکھ کر ہو چکا ہے زرد مریض غم ہجر

    فصل اب کٹنے ہی والی ہے پریشانی کی

    دونوں درخواستیں اس شوخ نے خارج کر دیں

    پہلے تو وصل کی اور پھر نظر ثانی کی

    زندگی کاٹ دی جل جل کے جہاں میں ماچسؔ

    واقعی تو نے بڑی عشق میں قربانی کی

    موضوعات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے